نعت رسول پاک صلی اللہ علیہ وسلم ۔۔۔ خاور اعجاز

پتھر سے مَیں ہو جائوں گہر سیدِ عالمؐ مجھ پر بھی عنایت کی نظر سیدِ عالمؐ باقی ہے جو کچھ زیست مِری ، آپؐ جو چاہیں ہو جائے مدینہ میں بسر سیدِ عالمؐ کھُلتا ہے یہی آن کے سب پر دمِ آخر کوئی نہیں دم ساز ، مگر ، سیدِ عالمؐ کافی ہے تسّلی کو یہی ایک وسیلہ مجھ پر رہے وا نعت کا در سیدِ عالمؐ خاور کو معافی ہو ، اگر چُوک ہُوئی ہو اُس کو نہیں مدحت کا ہنر سیدِ عالمؐ

Read More

نعت رسول پاک صلی اللہ علیہ وسلم ۔۔۔ اکرم ناصر

نعت کہنا چاہتا ہوں ، نعت ہوتی ہی نہیں دوستو حدِ ادب ہے ، بات ہوتی ہی نہیں کامیاب و کامراں ہیں، آپ کی رہ کے شہید یعنی ان شیدائیوں کو ،مات ہوتی ہی نہیں آ ہی جاتے ہیں کبھی آنسو خدا کے خوف سے ہاں مگر کھل کر کبھی برسات، ہوتی ہی نہیں دن سے بھی بڑھ کر عبادت میں مگن رہتے ہیں لوگ یعنی اس شہرِ نبی میں رات ہوتی ہی نہیں سچ کہا ہے ،جو نہ ملتی ہو تمہارے شہر میں ایسی دنیا میں کوئی سوغات ہوتی…

Read More

نعت رسول پاک صلی اللہ علیہ وسلم ۔۔۔ سرور حسین نقشبندی

وردِ درود پاک نے ایسا کمال کر دیا فکر و دل و نگاہ کو شاخِ نہال کر دیا لہجہ مرے رسول کا معجزۂ مقال تھا جس نے ہر ایک تند خو شیریں مقال کر دیا عزتیں بخش دیں تمام کس نے صہیبِ روم کو کس نے رخِ بلال کو رشکِ جمال کر دیا نعتِ نبی سے فکر میں ایسے گلاب کھل اٹھے حرف و خیال و صوت کو خوشبو مثال کر دیا دونوں جہاں کی دولتیں اس پہ نثار ہو گئیں جس نے فدا حضور پر مال و منال کر…

Read More

نعت رسول پاک صلی اللہ علیہ وسلم ۔۔۔۔ سید ریاض حسین زیدی

جائیں جنت کو سب قرینے سے راستہ مل گیا مدینے سے رازِ ہستی ہے منکشف اس پر کھوجتا ہے جو اس دفینے سے جو بھی آئے،وہ جھولیاں بھر لے سب کو ملتا ہے اس خزینے سے ماہِ میلاد کر گیا فرخ سب مہینے ہیں اس مہینے سے آپ کو بھول کر رہیں زندہ موت آ جائے ایسے جینے سے لاکھ طوفاں ہوں درپئے آزار پار اتریں گے اس سفینے سے جو ہے خوشبو ریاض کلیوں میں ہے وہ سب آپؐ کے پسینے سے

Read More

نعت رسول پاک صلی اللہ علیہ وسلم ۔۔۔ صفدر صدیق رضی

اے دل نبی کے عشق میں تو کیا شریک ہے اس کا تو ربِ ارض و سما لاشریک ہے کرتا ہوں زخم خاکِ مدینہ سے مندمل تنہا نہیں میں اس میں زمانہ شریک ہے کچھ لکھ رہا ہوں خاکِ مدینہ کو گھول کر اس میں یہ خاکسار اکیلا شریک ہے آپ آئے کائنات کی آنکھیں ہیں فرشِ راہ اور اس میں فرشِ خانۂ کعبہ شریک ہے جس روشنی سے تیرگی کے سائے چھٹ گئے اس روشنی میں آپ کا سایہ شریک ہے لو جا رہا ہوں سوئے مدینہ میں سر…

Read More

نعتؐ ۔۔۔ شفیق آصف

نورِ مرسل سے جہاں میں روشنی ہے سرفراز قریہ قریہ بستی بستی دلکشی ہے سرفراز آپ کی آمد سے سچ کا بول بالا ہو گیا ظلمتوں کی وادیوں میں آشتی ہے سرفراز آپ کے آنے سے پہلے زندگی بے کیف تھی آپ ہی سے میرے آقا! زندگی ہے سرفراز آپ کی صورت سے لیتے ہیں ستارے روشنی اس لیے تو آسماں پر چاندنی ہے سرفراز ہر گھڑی جس شخص کے ہونٹوں پہ رہتا ہو درود دو جہاں میں آپ کا وہ امتی ہے سرفراز

Read More

عقیدت ۔۔۔ محمد انیس انصاری

میں ہوں دور مدینہ سے ، پر مجھ سے مدینہ دور نہیں ہے اُن کا غلام ہو آنکھ سے اوجھل ، آقاؐ کو منظور نہیں ہے نئی سحر کا سورج نکلا ، گیا وہ دور غلامی پچھلا ٹوٹ گئیں ساری زنجیریں ، اب انساں محصور نہیں ہے بند ہوا اک باب پرانا ، زندہ دَرگوری کا فسانہ ہر بیٹی اب زندہ رہے گی ، کوئی ماں مجبور نہیں ہے خلقت ہے میزان کنارے ، جب ہر کوئی اُن کو پکارے چھوڑ دیں وہ امّت کو تنہا ، یہ اُن کا…

Read More